Premium Content

Add

وزیراعظم نے اشیائے ضروریہ کی اسمگلنگ کے خلاف فوری کارروائی کا حکم دے دیا

Print Friendly, PDF & Email

نگراں وزیراعظم انوار الحق کاکڑ نے متعلقہ محکموں کو اسمگلنگ کے خاتمے کے لیے کوششیں تیز کرنے کی ہدایت کی ہے۔

وہ اسلام آباد میں افغان ٹرانزٹ ٹریڈ ایگریمنٹ کے تحت سرحدی اضلاع میں تجارت اور اسمگلنگ کے خاتمے کے حوالے سے جائزہ اجلاس کی صدارت کر رہے تھے۔

وزیراعظم نے کہا کہ سرحدی اضلاع میں خصوصی اقتصادی زونز اور صنعتیں قائم کرکے متبادل باوقار روزگار کی فراہمی کو یقینی بنایا جائے۔

انہوں نے سرحدی علاقوں کے لوگوں کو روزگار کے مواقع فراہم کرنے، ان کی سماجی تحفظ اور انہیں خود مختار بنانے کے لیے ایک جامع منصوبہ بندی کرنے کی بھی ہدایت کی۔

وزیراعظم نے کہا کہ پوری پاکستانی قوم اسمگلنگ کی وجہ سے مشکلات کا شکار ہے اور حکومت اس کے مکمل خاتمے تک آپریشن جاری رکھے گی۔

Don’t forget to Subscribe our Youtube Channel & Press Bell Icon.

انہوں نے واضح طور پر کہا کہ نگراں حکومت اپنی مدت کے آخری لمحات تک اسمگلنگ کے خاتمے کے لیے اقدامات کرتی رہے گی۔

وزیراعظم نے این ایل سی کو چمن بارڈر پر اسکیننگ اور چیکنگ کے منصوبے کو ترجیحی بنیادوں پر مکمل کرنے کی ہدایت کی۔

وزیراعظم نے زور دے کر کہا کہ اسمگلنگ کی روک تھام کے ساتھ ساتھ شہری علاقوں میں اسمگل شدہ اشیاء کی مانگ کو بھی کنٹرول کرنے کی ضرورت ہے۔

وزیراعظم نے کہا کہ سرحدی علاقوں میں قانونی تجارت کو فروغ دیا جائے اور مکمل دستاویزات کو یقینی بنایا جائے۔

Leave a Comment

Your email address will not be published. Required fields are marked *

AD-1