Premium Content

  پاکستان توانائی کی ضرورت پر امریکا سے رابطے میں ہے: دفتر خارجہ

Print Friendly, PDF & Email

اسلام آباد: دفتر خارجہ کی ترجمان ممتاز زہرہ بلوچ نے کہا ہے  کہ پاکستان توانائی کی ملکی ضروریات کے لیے امریکا سے رابطے میں ہے۔

اسلام آباد میں اپنی ہفتہ وار میڈیا بریفنگ سے خطاب کرتے ہوئے ترجمان نے کہا کہ انہوں نے ایران سے توانائی حاصل کرنے پر پاکستان کی رضامندی پر امریکی بیان دیکھا ہے۔

محکمہ خارجہ کے ترجمان نے ایرانی صدر ابراہیم رئیسی کے دورہ پاکستان کے بعد اسلام آباد کو پابندیوں کے ممکنہ خطرے کے حوالے سے خبردار کیا تھا۔

ترجمان نے کہا کہ ہم ایران کے ساتھ تجارتی معاہدوں پر غور کرنے والے ہر فرد کو پابندیوں کے ممکنہ خطرے سے آگاہ رہنے کا مشورہ دیتے ہیں۔

بلوچ نے کہا کہ پاکستان اور ایران کے درمیان ترجیحی بنیادوں پر تجارت کے لیے تعاون ہے۔ انہوں نے کہا کہ پاکستان ایران گیس پائپ لائن کے معاملے پر بات ہوئی اور بعد میں مشترکہ بیان میں بھی اس کی عکاسی ہوئی۔

انہوں نے کہا کہ پاکستان نے ایرانی صدر کے ساتھ گوادر اور چابہار بندرگاہوں کے درمیان تجارتی راستے پر بات کی۔ انہوں نے کہا کہ پاکستان اور ایران کے درمیان دوطرفہ تعلقات مضبوط ہیں۔

جہاں تک فلسطین میں اسرائیل کے مظالم کا تعلق ہے، زہرہ بلوچ نے کہا کہ پاکستان نے اسرائیل کے مظالم کی مذمت کی اور بین الاقوامی تحقیقات کا مطالبہ کیا۔ انہوں نے کہا کہ غزہ اور کشمیر کے معاملے پر پاکستان اور ایران کا موقف یکساں ہے۔

انہوں نے کہا کہ وزیر اعظم شہباز شریف 28 اپریل کو دورہ سعودی عرب کا آغاز کریں گے اور گیمبیا میں او آئی سی کے اجلاس میں بھی شرکت کریں گے۔

Don’t forget to Subscribe our Youtube Channel & Press Bell Icon.

Leave a Comment

Your email address will not be published. Required fields are marked *

Latest Videos