Premium Content

سپریم کورٹ میں سائفر تحقیقات کی اپیل

Print Friendly, PDF & Email

تازہ ترین پیشرفت میں، سپریم کورٹ نے اُن اپیلوں کو مسترد کر دیا جن میں سائفر کی تحقیقات کا مطالبہ کیا گیا تھا جس کے بارے میں عمران خان نے دعویٰ کیا تھا کہ ان کی حکومت گرانے کے لیے ’غیر ملکی سازش‘ کا ثبوت ہے۔ جسٹس قاضی فائز عیسا نے اپنے چیمبر میں سماعت کے دوران پوچھا کہ عمران خان نے خود اس معاملے کی انکوائری کا حکم کیوں نہیں دیا جب کہ اس وقت بطور وزیر اعظم انہیں ایسا کرنے کا مکمل اختیار حاصل تھا، اور مزید کہا کہ عدالت ایگزیکٹو ڈومین میں مداخلت نہیں کر سکتی۔  جب وکیلوں میں سے ایک نے دعوی کیا کہ سائفر کی تحقیقات بنیادی حقوق کا معاملہ ہے، تو اس نے اختلاف کرتے ہوئے پوچھا کہ اس دستاویز کا کسی کی زندگی پر کیا اثر پڑا ہے۔

سائفر کی کہانی شروع سے ہی ایک ریڈ ہیرنگ تھی جب پی ٹی آئی کے سربراہ نے مارچ 2022 میں ایک ریلی میں مطلوبہ دستاویز کو ہجوم میں دکھایا۔ یہ عوام کی حمایت حاصل کرنے کے لیے آخری کوشش تھی حالانکہ  اُن کو معلوم تھا کہ طاقتور حلقے اُن کو اقتدار میں اب مزید نہیں رہنے دیں گے۔ تاہم، اپنے سیاسی حریفوں کو دباؤ میں ڈالنے کے لیے اُنہوں نے غیر ملکی سازش کا بیانیہ اپنایا اور اس مقصد میں کسی حد تک کامیاب بھی دکھائی دیے۔ حکومت سے جانے کے بعد عمران خان نے تحمل کا مظاہرہ  نہ کیا اور سیاسی پوائنٹ سکورنگ کے لیے ایک ملک پر سازش کا الزام لگا دیا۔ سابق وزیر اعظم نے محکمہ خارجہ کے ایک افسر پر اس ملک کو دھمکی دینے کا لاپرواہی سے الزام لگا کر امریکہ کے ساتھ پاکستان کے تعلقات کو خطرے میں ڈال دیا۔ اس نے ایک خفیہ تبادلے کا انکشاف کر کے کنونشن کی بھی خلاف ورزی کی جو سفارتی حلقوں میں کورس کے برابر ہے۔

این ایس سی کے دو اجلاس ہوئے ، جن میں سے ایک عمران  خان کی سربراہی میں وزیر اعظم کے طور پر ہوئی،  جس میں کہا گیا کہ  کسی ’’سازش‘‘ کا ثبوت نہیں ملا، لیکن پی ٹی آئی کے سربراہ پر بھی اپنے بیانیے سے نہیں ہٹے۔ حالیہ دنوں  میں، وہ اپنے بیانیے سے منحرف ہوگئے ۔حال ہی میں غیر ملکی میڈیا کو انٹرویو دیتے ہوئے کہا کہ سابق آرمی چیف جنرل قمر باجوہ حکومت گرانے میں ملوث تھے ، امریکہ نہیں تھا۔ عمران خان کا کہنا تھا کہ اُنکی حکومت گرانے کا منصوبہ یہاں بنایا گیا۔ انہوں نے دعویٰ کیاکہ  یہ اُن کے لیے بھی  ایک عجیب اور حیران کن کہانی ہے۔

Leave a Comment

Your email address will not be published. Required fields are marked *

Latest Videos