Premium Content

بلاگ تلاش کریں۔

مشورہ

کمبوڈیا: اپوزیشن لیڈر کیم سوکھا کو غداری کیس میں 27 سال کی قید

Print Friendly, PDF & Email

کمبوڈیا کی عدالت نے اپوزیشن لیڈر کو غداری کے کیس میں 27 سال قید کی سزا سنادی۔

میڈیا رپورٹس کے مطابق کمبوڈیا کے اپوزیشن لیڈر کیم سوکھا گھر میں نظربند تھے، ان کے خلاف تین سال سے غداری کا مقدمہ زیر سماعت تھا جس میں کورونا کے باعث تاخیر ہوئی۔

اب کمبوڈیا کی عدالت نے اپوزیشن لیڈر کیم سوکھا کو غداری کا مرتکب قرار دے کر 27 سال قید کی سزا سنائی ہے۔

کمبوڈیا کی میونسپل کورٹ نے کمبوڈیا نیشنل پارٹی کے سابق صدر پر سیاست میں حصہ لینے اور ووٹ ڈالنے پر غیر معینہ مدت کے لیے پابندی عائد کی ہے جب کہ انہیں اہلخانہ کے علاوہ کسی سے ملاقات کی اجازت نہیں ہوگی۔

یہ بھی پڑھیں: https://republicpolicy.com/myanmar-ki-rehnuma-aung-saan-sochi-ko-corruption/

میڈیا رپورٹس کے مطابق کیم سوکھا کو 2017 میں بغیر کسی وارنٹ کے ان کے گھر سے گرفتار کیا گیا تھا اور ان کی درخواست ضمانت کو متعدد بار مسترد کرکے انہیں گھر میں نظربند رکھا گیا تھا۔

کمبوڈیا کی حکومت نے کیم سوکھا پر بیرونی قوتوں کے ساتھ مل کر ملک کے خلاف سازش کا الزام عائد کیا ہے۔

Leave a Comment

Your email address will not be published. Required fields are marked *

Latest Videos